پیر 19 نومبر 2018ء
پیر 19 نومبر 2018ء

آزادکشمیر صوبہ نہیں بنے گا، وزیر اعظم

میرپور(پی آئی ڈی) وزیر اعظم آزادکشمیر راجہ محمدفاروق حیدرخان نے کہا ہے کہ آزادکشمیر میں دو ایوانی نہیں بلکہ یک ایوانی مقننہ ہے ، کونسل ایگزیکٹو باڈی ہے جس کے چیئرمین وزیر اعظم پاکستان ہوتے ہیں ۔ کچھ لوگوں کو سمجھ نہیںیا وہ کونسل کے اختیارات سے لاعلم ہیں ۔ آزادکشمیر کے آئین کے حوالے سے اپنی کوششوں میں مصروف ہیں تاکہ ریاست کے لوگوں کی منتخب اسمبلی با اختیار ہو۔آزادکشمیر اسمبلی با اختیار ہوگی تو لوگوں کے منتخب کردہ نمائندے زیادہ با اختیار ، ذمہ دار اور جوابدہ ہونگے۔ ان خیالات کا اظہار انہوںنے اپنے دورہ میرپور کے دوران کشمیر پریس کلب میرپور کی نومنتخب باڈی کو مباکباد دینے کے موقع پر صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ انہوںنے کہا کہ کچھ لوگ جو اپنے آپ کو آزادکشمیر کا وارث اور جانشین سمجھتے ہیں انہیں یہ کہنا چاہتا ہو ں کہ یہاں باقی لوگوں کی خدمات بھی کسی سے کم نہیں ، غازیوں اور مجاہدوں کے علاوہ بھی لوگوں نے قربانیاں دی ہیںاور ان کا تحریک آزادی کشمیر ، آزادکشمیر کی ترقی و خوشحالی ، آزادکشمیر کے عوام کے حقوق اور نظریہ پاکستان کی ترویج میں بھی بے مثال کردار ہے ۔ وزیر اعظم آزادکشمیر نے کہا کہ آزادکشمیر کو صوبہ بنانے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا،ہماری خواہش ہے کہ حکومت پاکستان کے ساتھ ہمارے رشتے مزید مضبوط ہوں اور جو معاملات حکومت پاکستان اور حکومت آزادکشمیر کے درمیان ہیں وہ براہ راست ان دونوں کو طے کرنے چاہیں۔