جمعرات 27 جنوری 2022ء
جمعرات 27 جنوری 2022ء

پاک فوج نے انتخابات میں ڈیوٹی دینے سے معذرت کر لی

مظفراباد(دھرتی نیوز)آزاد جموں و کشمیر قانون ساز اسمبلی کے انتخابات جو پچیس جولائی کو ہو رہے ہیں کے دوران امن وامان قائم رکھنے کے لیے الیکشن کمیشن نے وفاقی حکومت سے مدد مانگ لی ہے تاہم پاک فوج نے ان انتخابات میں پولنگ اسٹیشنز پر ڈیوٹی دینے کی بجائے ہنگامی حالت میں مدد کرنے پر رضامندی ظاہر کی ہے۔آزاد کشمیر حکومت کے ذرائع کے مطابق پاک آرمی کی بجائے پاکستان رینجرز اور فرنٹیئرکانسٹبلیری کی یونٹس پولنگ اسٹیشنز پر پولیس کی مدد کریں گی جبکہ پولیس کی اضافی نفری پنجاب اور کے پی کے سے منگوائی جائے گی۔ان انتخابات میں حصہ لینے والی بعض سیاسی جماعتوں نے ماضی کی طرح اپنے اس مطالبے کو دہرایا تھا کہ صاف و شفاف انتخابات کے لیے پاک فوج کی نگرانی میں الیکشن کروائے جائیں۔حکومت آزاد کشمیر نے اس حوالے طے شدہ طریقہ کار کے تحت پاک فوج کے اعلیٰ حکام سے رابطہ کیا تھا اور وزارت داخلہ پاکستان کو ایک خط بھی لکھا تھا لیکن پاک فوج نے انتخابات میں ڈیوٹی دینے سے معذرت کرتے ہو ئے اس بات پر رضامندی دی ہے کہ وہ دیگر سیکورٹی فورسز کے ساتھ رابطے میں رہ کر کسی بھی ہنگامی صورتحال میں مدد کرنے کو تیار رہیں گے۔آزاد کشمیر  کے اکثریتی علاقوں میں پولنگ پر امن ہوتی ہے اور بہت کم تعداد میں پولنگ اسٹیشن احساس یا احساس ترین قرار دئیے جاتے ہیں۔ان  احساس یا احساس ترین پولنگ اسٹیشنز پر رینجرزاور ایف سی کو تعینات کیا جائے گا۔سیکورٹی پلان کے مطابق ریٹرنگ آفیسرز کے دفاتر کی سیکورٹی بھی پاکستان رینجرز کے پاس ہو گی۔الیکشن کمیشن کے ذرائع کے مطابق سیکورٹی کو فول پروف بنانے اور امن وامان قائم رکھنے کے لیے تمام تر وسائل بروئے کار لائے جائیں گے اور جو بھی ممکنہ اقدامات کیے جا ستے ہیں وہ کیے جائیں گے۔  

آج کااخبار

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

کالم