پیر 19 نومبر 2018ء
پیر 19 نومبر 2018ء

پیپلزپارٹی کے بانی رہنما سردار لطیف خان سپرد خاک

راولاکوٹ ( نمائندہ خصوصی) پاکستان پیپلزپارٹی آزادکشمیر کے بانی رہنما سردار محمد لطیف خان کو ہزاروں سوگواران کی موجودگی میں آبائی قبرستان چہڑھ میں سپرد خاک کردیا گیا ، ان کی نماز جنازہ میںپاکستان پیپلزپارٹی آزادکشمیر کے صدر چوہدری لطیف اکبر ، امیر جماعت اسلامی آزادکشمیر ڈاکٹر خالد محمود ، سابق وزیر اعظم چوہدری عبدالمجید ، سابق اسپیکر قانون ساز اسمبلی سردار غلام صادق ، سابق وزیر اطلاعات عابد حسین عابد ، سابق معاون خصوصی برائے وزیر اعظم ڈاکٹر سردار محمد حلیم خان ،سابق وزیر سردار طاہر انور ایڈووکیٹ، سابق امیدوار قومی اسمبلی سردار شوکت حیات ، پی ٹی آئی کے مرکزی ڈپٹی چیف آرگنائزر سردار نیئر ایوب ، ن لیگ کے ضلعی صدر اعجاز یوسف ، جماعت اسلامی پونچھ کے ضلعی امیر سجاد انور ، امیر کارپوریشن سردار قیوم افسر ، سابق امیدوار اسمبلی سردار طاہر اکرم ،، سردار محمد عظیم خان، سردار آبشار کفائت سمیت آزادکشمیر بھر سے سرکردہ سیاسی و سماجی شخصیات ، علماء، وکلاء، ضلعی افسران ، سول و فوجی حکام ، ملازمین ، تاجران ، صحافیوں ،ٹریڈ یونینز کے نمائندگان ، سماجی تنظیموں کے عہدیداران ، سابق بلدیاتی نمائندگان اور تمام مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے ہزاروں افراد نے شرکت کی ، اس موقع پر صد ر پیپلزپارٹی آزادکشمیر چوہدری لطیف اکبر نے پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئر مین بلا ول بھٹو ، انچار ج سیاسی امور آزادکشمیر فریال تالپور کا تعزیتی پیغام بھی دیا ، تعزیتی ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے سردار محمد لطیف خان کی سیاسی و سماجی خدمات کو شاندار الفاظ میں خراج عقیدت پیش کیا اور کہا کہ ان کی پوری زندگی جدوجہد سے عبارت تھی اور انہوں نے ہمیشہ غریب اور حقداروں کی جنگ لڑی ، کبھی اپنی ذات کو ترجیح نہیں دی ، خود داری ، خلوص ، دیانتداری اور شرافت کا پیکر تھے ،ان کی عوامی حقوق کیلئے جدوجہد کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ، خدمت خلق ان کا شیوہ تھا اور پوری زندگی اسی میں صرف کی ،ان کی وفات سے پیدا ہونیوالے خلاءکو پر کرنا نا ممکن تو نہیں مشکل ضرور ہے ، ان کی وفات آزادکشمیر بھر کے سیاسی کارکنوں کیلئے افسردگی کا باعث ہے کیونکہ سیاسی کارکنان کسی ایک جماعت یا خاندان کا نہیں بلکہ سب کیلئے سرمایہ ہوتا ہے ، سردار لطیف خان میں جو خصوصیات پائی جاتی تھیں وہ بہت کم سیاسی کارکنوں میں ہوتی ہیں ، اس موقع پر ان کی مغفرت اور پسماندگان کے صبر جمیل کی دعا کی گئی ۔واضح رہے کہ سردار محمد لطیف خان طویل عرصہ سے علیل تھے اور کینسر کے عارضہ میں مبتلا تھے ، وہ بغر ض علاج ایبٹ آباد کے ایک ہسپتال میں داخل تھے جہاں ان کا انتقال ہوا، سردار محمد لطیف خان کا شمار پیپلزپارٹی کے نظریاتی کارکنان میں ہوتا تھا وہ سابق وزیر اعظم ممتاز حسین راٹھور ، چوہدری عبدالمجید ، صدر پی پی پی لطیف اکبر کے انتہائی بااعتماد ساتھی تھے ، وہ اس وقت سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے ممبر تھے ، قبل ازیں وہ تحصیل صدر بھی رہے ، سردار محمد لطیف محکمہ جنگلات میں بطور فارسٹر ملازمت اختیار کی تھی ، انہوں نے ملازمت کو خیر آباد کہہ کر پیپلزپارٹی میں شمولیت اختیار کی اور آخری وقت تک پی پی کے ساتھ ہی منسلک رہے ،